انٹرنیٹ پر مردوں کی کونسی عادت خواتین کو سب سے بری لگتی ہے؟ انٹرنیٹ پر پیار ڈھونڈتے مردوں کے لیے مشورہ آگیا


لندن  خواتین کو ڈیٹنگ ایپلی کیشنز پر مردوں کی کون سی چیزیں پسند ہوتی ہیں اور کون سی ناپسند؟ چار لڑکیوں نے اس سوال کا جواب دے دیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق لندن کی رہائشی 21سالہ مومو نامی لڑکی نے بتایا ہے کہ ”جس مرد کے ساتھ مجھے لگے کہ میں گھنٹوں باتیں کر سکتی ہوں اور گھنٹوں اس کے ساتھ خاموش رہتے ہوئے گزار سکتی ہوں، میں اس مرد کو اپنا پارٹنر منتخب کروں گی۔ ایسے مرد جو اچھی حس مزاح رکھتے ہوں مجھے بہت اچھے لگتے ہیں۔ ایسے مرد جو خواتین کو متاثر کرنے کے لیے سخت جتن کرتے ہیں، مصنوعی روئیے کا مظاہرہ کرتے ہیں اور بلاوجہ دوسروں پر طنز کرتے ہیں، مجھے بالکل پسند نہیں آتے۔“

برسٹل کی رہائشی 21سالہ ایلا نامی لڑکی نے کہا ہے کہ ”مجھے ایسے مرد اچھے لگتے ہیں جو میرے بارے میں سوالات پوچھتے ہیں اور میرے متعلق زیادہ سے زیادہ جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔ بااعتماد، ذہین، اچھی حس مزاح والے مرد مجھے اچھے لگتے ہیں۔ مغرور، جاہل اور صرف اپنی ذات کے متعلق باتیں کرنے والے مرد مجھے اچھے نہیں لگتے۔“ایکسیسٹر کی رہائشی 20سالہ لی این کا کہنا تھا کہ ”ایسے مرد جو مذاق اور طنز میں فرق سمجھتے ہوں، اچھی حس مذاح کے مالک ہوں اور ایسی چیزوں کے بارے میں باتیں کرتے ہوں جن سے وہ محبت کرتے ہیں یا جن کی پروا کرتے ہیں، ایسے مرد مجھے اچھے لگتے ہیں۔ بدتمیز، مغرور اور ہتک آمیز سلوک کرنے والے مرد مجھے اچھے نہیں لگتے۔ ہاں جو مرد میرے لطیفوں پر نہ ہنسے مجھے وہ بھی برا لگتا ہے کیونکہ اس سے میری اناءکو ٹھیس پہنچتی ہے۔مجھے ایسے مرد بھی برے لگتے ہیں جنہیں بڑے بڑے مسائل کے متعلق بھی علم نہ ہو۔ کارک کی رہائشی 22سالہ ایلی کا کہنا تھا کہ ”ایسا بااعتماد مرد، جسے فیشن کا سمجھ بوجھ اور دوسروں سے بات کرنے کا سلیقہ ہو اورمیرے بارے میں جاننے کے لیے مجھ سے سوالات کرے، مجھے اچھا لگتا ہے۔ دوسروں کی عزت نہ کرنے والے مرد مجھے قطعاً ناپسند ہیں۔ میں ایسے مردوں کے قریب بھی نہیں جاتی جو بدتمیزی کے ساتھ دوسروں پر جملے کستے ہیں۔“