خواتین ٹینس کھلاڑی مردوں کے مساوی انعامی رقم ملنے پر خوشی سے نہال

لاہور  پاکستان کی خواتین ٹینس کھلاڑیوں نے مردوں کے مساوی انعامی رقم ملنے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ مساوی انعامی رقم کی روایت قائم کرنا خوش آئند ہے اور مستقبل میں بھی یہ سلسلہ جاری رہنا چاہئے کیونکہ اس سے لڑکیوں کی کھیلوں کے میدان میں آنے کیلئے حوصلہ افزائی ہو گی۔

تفصیلات کے مطابق لاہور جم خانہ کلب میں حسن طارق رحیم ٹینس چیمپین شپ جاری ہے جس کی خاص بات سب سے زیادہ انعامی رقم کے ساتھ ساتھ مردوں و خواتین کیلئے یکساں انعامی رقم کا ہونا بھی ہے۔ ٹینس اسٹار عشنا سہیل کا کہنا ہے کہ خوشی ہے کہ مردوں اور خواتین کھلاڑیوں کی انعامی رقم مساوی کی گئی ہے امید ہے کہ فیڈریشنز مستقبل کے ٹورنامنٹس میں مساوی انعامی رقم کی روایت قائم کرے گی۔

نور ملک کا کہنا ہے کہ مزید ایسے ٹورنامنٹس ہونے چاہئیں جن میں مساوی انعامی رقم ہو ، یکساں انعامی رقم ملنے سے کھلاڑی مزید متحرک ہوتی ہیں۔ عیشا جاوید کہتی ہیں کہ پہلے انعامی رقم میں بہت فرق تھا ، اب اس فرق کو کم کیا گیا ہے جو کہ قابل ستائش ہے ، اس سے وومن کھلاڑیوں کی حوصلہ افذائی ہو گی۔

مریم مرزا کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس ایس او پیز کا کھلاڑیوں کی صحت اور حفاظت کیلئے خیال رکھا جا رہا ہے، یہ ہم سب کیلئے بہت ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ امید ہے کہ مستقبل میں مساوی انعامی رقم والے ایونٹس ہی ہوں گے ، اس سے مقابلے کی فضا بڑھے گی اور مزید کھلاڑی سامنے آئیں گی۔