دنیا کی سب سے بڑی کمپنی باؤ اسٹیل کا پاکستان اسٹیل ملز خریدنے میں دلچسپی کا اظہار


اسلام آباد: چیئرمین نجکاری کمیشن نے اسٹیل ملز کی بحالی کامنصوبہ پیش کردیا اور بتایا کہ دنیا کی سب سے بڑی باو اسٹیلز نے پاکستان اسٹیل ملز خریدنے میں دلچسپی کا اظہار کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل کی زیرصدارت کابینہ کمیٹی نجکاری کااجلاس ہوا ، جس میں چیئرمین نجکاری کمیشن کی جانب سےموجودہ نجکاری پلان کا روڈ میپ پیش کیا گیا۔

چیئرمین نجکاری کمیشن نےاسٹیل ملزکی بحالی کامنصوبہ پیش کردیا ، جس میں سفارشات دی گئی ہے کہ پاکستان اسٹیل ملزبیرونی سرمایہ کاری سےدوبارہ بحال کی جائےگی، ملزکی بحالی میں جدیدٹیکنالوجی ٹرانسفر بھی ہوسکےگی اور روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے۔

کمیٹی کو باوٴاسٹیل کے وفد کے حالیہ دورے سے متعلق بریفنگ میں بتایا گیا کہ دنیاکی سب سے بڑی باو ٴاسٹیل کمپنی 18 کروڑٹن اسٹیل کی پیداوارکرتی ہے، باؤ اسٹیلز نے پاکستان اسٹیل ملز خریدنے میں دلچسپی کا اظہار کیا ہے۔

بریفنگ میں کہا گیا اسٹیل ملزکی1229ایکڑاراضی اورجیٹی کی کمرشل لیزنگ ہوسکےگی، کمیٹی نےمتفقہ طوراسٹیل ملزکی بحالی کاخیرمقدم کیا۔

کمیٹی کی وزارت صنعت اور پاورڈویژن اوربحری امورکو معاملات حل کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے این پی پی ایم سی ایل کی نجکاری کیلئے ملنے والی 102ارب کی بڈنگ پر تبادلہ خیال
کیا۔

اس حوالے سے کمیٹی نے این پی پی ایم سی ایل کی نجکاری کیلئےذیلی کمیٹی قائم کردی، کمیٹی وزیرتوانائی ،چیئرمین نجکاری کمیشن اورمتعلقہ وزارتوں کےسیکرٹریز پر مشتمل ہوگی۔

کمیٹی کو بجلی کی تقسیم کارکمپنیوں میں نجی شراکت داری پربھی بریفنگ دی گئی ، جس پر کمیٹی نےبجلی کی ایک تقسیم کارکمپنی کورعایتی انتظام کی ہدایت کردی۔