راوی ریور اربن ڈویلپمنٹ منصوبے کو ماحول دشمن قرار دے دیا گیا ، تہلکہ خیز رپورٹ سامنے آگئی


لاہور ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان نے راوی ریور فرنٹ اربن ڈویلپمنٹ منصوبے کو ماحول دشمن قرار دے دیا ہے۔نجی نیوز چینل ہم نیوز کے مطابق ہیومن رائٹس کمیشن کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 30 سالہ منصوبے سے 76 ہزار ایکٹر زرعی رقبہ متاثر ہوگا، منصوبے کا 77 فیصد حصہ زرعی رقبے کو جبکہ دیگر رہائشوں، جنگلات اور دریائی رقبہ کو متاثر کرے گا۔رپورٹ کے مطابق اس منصوبے کے تحت 79 گاوں متاثر ہونگے جن میں سے 20 لاہور جبکہ 69 شیخوپورہ کی حدود میں واقع ہیں۔ منصوبے کے باعث زیر زمین پانی شدید متاثر ہونے کا بھی خدشہ ہے۔ منصوبے کے تکمیل کے دوران ٹرانسپورٹ اور جنریٹرز کے باعث فضائی آلودگی میں بھی اضافہ ہوگا۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ منصوبہ بے گھر افراد کو چھت فراہم کرنے کے بجائے سینکڑوں خاندانوں سے ان کے ذریعہ معاش چھین لے گا۔منصوبے کی تکمیل کے لیے مقامی افراد پر مبینہ دباوڈالنے کے لیے پولیس اور دیگر بااثر اداروں کو استعمال کیا جا رہا ہے۔