سابق بھارتی کرکٹر اور رہنما نوجوت سنگھ سدھو کیوں پاکستان آرہے ہیں؟


سابق بھارتی کرکٹر اور سیاسی رہنما نوجوت سنگھ سدھو کا جلد دورہ پاکستان متوقع

تفصیلات کے مطابق بھارت کے سابق ٹیسٹ کرکٹر اور ممتاز سیاسی رہنما نوجوت سنگھ سدھو نے پاکستان میں ہونے والے انٹرنیشنل کبڈی مقابلوں کے موقع پر پاکستان کے دورے کی دعوت قبول کر لی ہے۔

اس حوالے سے پاکستان کبڈی فیڈریشن کے جنرل سیکرٹری رانا سرور کا اسلام آباد میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان ننکانہ صاحب انٹرنیشنل کبڈی ٹورنامنٹ اور کرتار پور راہداری میں مقابلے ہوں گے اور دونوں ٹیمیں روزانہ کی بنیاد پر مقابلوں میں مدمقابل آئیں گی۔

انہوں نے بتایا کہ بھارتی کبڈی ٹیم کے ساتھ سابق بھارتی ٹیسٹ کرکٹر نوجوت سنگھ سدھو بھی آئیں گے، بھارتی ٹیم روزانہ مقابلے کے بعد اپنے ملک کو واپس چلے جایا کرے گی اور پھر اگلے روز دوبارہ واپس آئے گی، اس سلسلے میں دونوں ملکوں کی کبڈی فیڈریشنز میں بھی معاملات طے پا چکے ہیں۔

اسلام آباد میں منعقدہ تقریب کے دوران رانا سرور کا بتانا تھا کہ ملکی اور بین الاقوامی سطح پر کبڈی کے ایونٹس تاحال بند ہے، اس کے باوجود پاکستان کبڈی فیڈریشن قومی اور بین الاقوامی مقابلوں کا آغاز کرنے جا رہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ آئندہ ہونے والا اشیاء کپ اور کبڈی ورلڈ کپ پاکستان کو الاٹ ہوئے ہیں۔

واضح رہے کہ سابق ٹیسٹ کرکٹر نوجوت سنگھ سدھو وزیراعظم عمران خان کے قریبی دوستوں میں سمجھے جاتے ہیں، وزیراعظم عمران خان کی تقریب حلف برداری میں وہ خصوصی طور پر شریک ہوئے جبکہ کرتاپور راہداری کی تقریب میں بھی انہیں خصوصی طور پر مدعو کیا گیا تھا۔