سابق فاسٹ باؤلر محمد آصف کی وقار یونس پر سنگین الزامات کی بوچھاڑ


سابق فاسٹ باؤلر محمد آصف قومی کرکٹ ٹیم کے باؤلنگ کوچ کو کارکردگی نہ دکھانے پر آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے الزامات کی بوچھاڑ کردی ہے۔

سپاٹ فکسنگ اسکینڈل کے باعث کرکٹ سے دور ہونے والے سابق فاسٹ باؤلر محمد آصف کا کہنا تھا کہ 20سالوں سے وقار یونس کوچنگ کے شعبے میں ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ وقار یونس نے قومی ٹیم کو کون سا باؤلر دیا ہے، وقار یونس تجربہ کار باؤلرز کے بجائے نئے لڑکوں کو اس لیے ٹیم میں کھلاتے ہیں کہ وہ ان کے سامنے بول نہیں سکتے۔

محمد آصف نے وقار یونس پر بال ٹیمپرنگ کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ وقار یونس خود کو ریورس سوئنگ کا ماسٹر کہتے ہیں مگر انہوں نے کسی پاکستانی باؤلر کو یہ آرٹ نہیں سکھایا۔

انہوں نے کہا کہ وقار یونس ماضی میں گیند کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرکے ریورس سوئنگ کروانے میں کامیاب ہوتے تھے۔

خیال رہے کہ محمد آصف ، سلمان بٹ اور محمد عامر پر سپاٹ فکسنگ کے باعث آئی سی سی انٹی کرپشن یونٹ نے پابندی عائد کردی تھی، بعدازاں پابندی ختم ہونے کے بعد محمد آصف کو ٹیم میں سیلیکٹ نہ کیا گیا جس کی وجہ سینئر کھلاڑیوں اور پی سی بی انتظامیہ کی مخالفت بنی۔ محمد آصف آج کل امریکہ میں مقیم ہیں۔

محمد آصف اپنے دور میں لڑائی جھگڑے ، شوبزاداکارہ سے تعلقات سمیت کئی تنازعات کی زد میں بھی رہے۔