سپریم کورٹ کا آغا سراج درانی کو سرینڈر کرنے کا حکم


اسلام آباد : سپریم کورٹ نے اسپیکرسندھ اسمبلی آغاسراج درانی کو سرینڈر کرنے کا حکم دے دیا اور کہا آئندہ ہفتے اس کیس کی سماعت کریں گے ۔

تفصیلات کے مطابق کئی ہفتوں سے روپوش اسپیکرسندھ اسمبلی آغاسراج درانی ضمانت قبل ازگرفتاری کے لیے سپریم کورٹ پہنچے، اس موقع پر آغاسراج درانی نے میڈیا کے سوالوں کا جواب دینے سے گریز کیا اور کہا انصاف کی امید لیکرعدالت آیا ہوں،واپسی پر میڈیا سے بات کروں گا۔

سپریم کورٹ میں جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں تین رکنی بنچ 3 اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔

دوران سماعت عدالت نے آغاسراج درانی کو پہلے گرفتاری دینے کی ہدایت کردی، جسٹس عمر عطابندیال نے کہا آئندہ ہفتے اس کیس کی سماعت کریں گے۔

یاد رہے اکتوبر میں سندھ ہائی کورٹ نے اثاثہ جات کیس میں اسپیکرسندھ اسمبلی آغاسراج درانی کی ضمانت مسترد جبکہ اہلیہ اور بیٹوں کی ضمانت منظور کرلی تھی، جس کے بعد سے آغا سِراج درانی روپوش تھے۔

ضمانت قبل از گرفتاری منسوخی کے بعد نیب نے آغا سِراج درانی کے وارنٹ گرفتاری جاری کر رکھے ہیں، نیب ذرائع کے مطابق آغا سراج درانی و دیگر کی گرفتاری کے لیے جدید ڈیوائسز کا استعمال کیا جا رہا ہے، آغا سراج اور ذوالفقار ڈاہر کی آخری لوکیشن کراچی کی تھی۔