سیاحت کا پیسہ مقامی لوگوں پر خرچ کریں گے،پاکستان میں ایسے پہاڑ ہیں جو شاید ہی دنیا میں ہوں: عمران خان

اسلام آبادوزیراعظم پاکستان عمران خان نے کہا ہے کہ ملک کو غیر منظم سیاحت نے بہت نقصان پہنچایا۔ٹورزم تب کامیاب ہوتی ہے جب مقامی لوگوں کو فائدہ ہوں۔

اسلام آباد میں ایکوٹورزم کی لانچنگ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ چترال میں آئی بیکس کو بچایا گیا،ان کی ٹرافی ہنٹنگ سے حاصل ہونے والا پیسہ مقامی آبادی پر خرچ کیا جارہا ہے۔پہلے آئی بیکس کی نسل معدوم ہورہی تھی اب آئی بیکس چترال کی سڑکوں سے نظر آتے ہیں۔جو بھی ٹورزم کے سپاٹ کھولیں گے ان سے مقامی لوگوں کو فائدہ پہنچائیں گے۔ٹورزم اب ایک سائنس بن چکی ہے،پاکستان میں اب ٹورزم بڑھ رہی ہے۔پاکستان میں ٹورزم کے سیکٹر میں سب سے زیادہ پوٹینشل ہے۔شاید ہی دنیا میں ایسے پہاڑ ہوں جو پاکستان میں ہیں۔پاکستان کے بیشتر پہاڑی علاقے ابھی ڈسکور ہونا باقی ہیں۔80ارب ڈالر سوئٹرز لینڈ صرف اسکٹینگ سے کماتا ہے۔ہمارے شمالی علاقوں میں اسکٹینگ کے لئے بہترین سپاٹ ہیں ان کو ڈویلپ کررہے ہیں۔خطاب کے اختتام پر انہوں نے وزیراعلی کے پی کے محمود خان کوسیاحت کے نئے علاقے ڈویلپ کرنے پر شاباش بھی دی۔