متحدہ عرب امارات کا اہم اعلان


ابوظبی: مرکزی بینک نے اپنے ذخائر تک رسائی کے لیے نئے شرائط و ضوابط معتارف کرانے کا اعلان کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مرکزی بینک اپنے اسٹینڈنگ کریڈٹ اور لیکویڈیٹی انشورنس سہولیات کے لیے نئے عمومی شرائط و ضوابط متعارف کرائے گا، جس کے تحت لائسنس یافتہ مالیاتی ادارے بینک کے ذخائر تک رسائی حاصل کر سکیں گے۔
بینک کا کہنا ہے کہ نئے شرائط و ضوابط یکم مارچ 2022 سے نافذ العمل ہوں گے، جن میں ان سہولیات کو فعال کرنے سے متعلق صوابدیدی اختیارات، اور کولیٹرل مینجمنٹ کے لیے رہنما اصولوں کی وضاحت کی گئی ہے۔

اگر کسی اہل پارٹی کو کاروبار کے لیے فنڈ کی ضرورت پڑ جائے تو وہ اپنی صوابدید پر راتوں رات بینک کے ذخائر کے حصول کے لیے مستقل کریڈٹ سہولیات میں سے کسی ایک تک رسائی حاصل کر سکتی ہے، اس کے لیے وہ کولیٹرلائزڈ فنڈنگ یا مرابحہ ٹرانزیکشنز کا استعمال کرے گی۔

اس کے علاوہ مرکزی بینک غیر معمولی نوعیت کے کسی بھی حقیقی یا ممکنہ مسئلے کی صورت میں ہنگامی لیکویڈٹی انشورنس سہولت کو فعال کر سکتا ہے، جہاں اہل پارٹی کو توسیع شدہ شرائط پر بنک کے ذخائر تک رسائی مل سکتی ہے۔

مرکزی بنک کے گورنر خالد محمد بلامہ نے کہا کہ اہل ضمانت کے سپیکٹرم کی تنظیم نو مرکزی بینک کی طرف سے زیادہ مؤثر مداخلت کو یقینی بنائے گی، تاکہ تناؤ کے وقت مقامی مارکیٹ کے مسائل سے نمٹنے کے لیے اہل پارٹیز کو لیکویڈیٹی فراہم کی جا سکے۔

انھوں نے کہا کہ نئی خصوصیات اسٹینڈنگ کریڈٹ اور لیکویڈیٹی انشورنس کی سہولیات بھی بینک کو مارکیٹ کے تمام حالات سے نمٹنے میں مدد کریں گی۔