مذہبی جماعت کی ریلی: شرکا کا مارچ، پولیس کی شیلنگ


صوبے پنجاب کے شہر راولپنڈی میں مذہبی جماعت تحریک لبیک پاکستان کی جانب سے فرانس میں پیغمبر اسلام کے خاکوں کے خلاف ریلی نکالی جا رہی ہے۔
تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ خادم حسین رضوی کی قیادت میں ریلی کو راولپنڈی کے لیاقت باغ سے فیض آباد تک جانے کی اجازت ہے تاہم اسلام آباد جانے والے متعدد راستے بند کر دیے گئے ہیں۔
ریلی کے شرکا نے مری روڈ مکمل طور پر بند کردی جبکہ پولیس پر پتھراؤ بھی کیا گیا۔
پولیس اور انتظامیہ کی جانب سے شرکا پر آنسو گیس کی شیلنگ بھی کی گئی۔
تحریک لبیک پاکستان کے ترجمان نے الزام عائد کیا کہ انتظامیہ کی جانب سے ریلی کے شرکا کو مختلف مقامات پر روکا گیا اور کارکنوں کی پکڑ دھکڑ کی گئی جس سے کشیدہ صورت حال پیدا ہوئی۔
انہوں نے کہا کہ ریلی لیاقت باغ سے فیض آباد کی طرف پرامن طریقے سے جارہی تھی جبکہ انتظامیہ نے غفلت کے باعث حالات کو کشیدہ بنانے کی کوشش کی۔
ادھر راولپنڈی پولیس کے مطابق امن و امان کی صورت حال کو برقرار رکھنے کے لیے کارکنوں کی گرفتاریاں عمل میں لائی گئی ہیں اور کسی کو بھی امن و امان کی صورت حال خراب کرنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔
دوسری طرف اسلام آباد انتظامیہ نے راولپنڈی سے اسلام آباد جانے والے راستوں کو کنٹینرز لگا کر بند کر دیا ہے جبکہ راولپنڈی میں موبائل اور انٹرنیٹ سروس آج صبح سے ہی مکمل طور پر بند ہے۔
موبائل اور انٹرنیٹ سروس کی بندش اور راستے بند ہونے سے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔