مولانا کے رضاکاروں نے لیگی ایم این اے کو جلسہ گاہ کے اندر جانے سے روک دیا


لیگی ایم این اے ملک ریاض کی جے یو آئی (ف) کے رضا کاروں کے سامنے ترلے منتیں

آج اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کا لاہور میں مینار پاکستان گراؤنڈ میں جلسہ منعقد ہو رہا ہے جس کے لیے پولیس اور سیکیورٹی اداروں کے علاوہ جے یو آئی (ف) کی رضاکار فورس بھی حفاظتی فرائض سر انجام دے رہی ہے۔

لیگی ایم این اے ملک ریاض جلسہ گاہ کے دورے پر پہنچے تو جے یو آئی (ف) کے رضا کاروں نے لیگی ایم این اے اور کارکنوں کو دروازے پر روک دیا، لیگی ایم این اے اور کارکنوں نے اپنے سربراہ کا تعارف بھی کرایا مگر انصار فورس کے دروازے پر کھڑے رضاکار نے ان کو داخلے کی اجازت نہ دی۔


واقعہ کی سامنے آنے والی فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کس طرح لیگی رہنما جلسہ گاہ میں داخلے کے لیے رضاکاروں کے ترلے منتیں کر رہے ہیں مگر ان کو اندر داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جا رہی اور ان سے کہا جا رہا کہ کسی کو اندر بھیجنے کی اجازت نہیں۔

کافی دیر کی منت سماجت کے بعد ایم این اے ملک ریاض کو جلسہ گاہ میں داخل ہونے کی اجاز تو دی گئی مگر ان کے کسی کارکن کو اندر داخل نہیں ہونے دیا گیا۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے اس واقعہ کی فوٹیج سوشل میڈیا پر شیئر کرتے ہوئے کہا کہ پھر کہتے ہیں حکومت رکاوٹیں کھڑی کر رہی ہے۔ ان کی اوقات اور حالات دیکھیں کیسے مولانا کے گارڈ دروازہ بند کر کے مسلم لیگی ایم این اے ملک ریاض کو ذلیل کر رہے ہیں اور منتیں کروانے کے بعد اندر آنے دے رہے ہیں۔

ڈاکٹر شہباز گل کے مطابق یہ مسلم لیگ کے لیڈران کی ان کے اپنے جلسے میں عزت ہے۔