ٹیکس نہ دینے پر بڑی تعداد میں اوورسیز پاکستانیوں کے موبائل فون بند کر دیے گئے


اووسیز پاکستانیوں کو ٹیکس نہ دینے پر مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہاہے،پی ٹی اے نے کورونا کے باعث پاکستان میں رہنے پر مجبور ہزاروں اوورسیز پاکستانیوں کے موبائل فون ٹیکس ادا نہ کرنے پر بند کردیئے ہیں۔

گزشتہ سال کورونا کے باعث نومبر، دسمبر اور جنوری میں پاکستان آنے والے 50ہزار افراد امریکا، برطانیہ، کینیڈا، یورپی ممالک اورجنوبی کوریا سے پروازیں معطل ہونے کے باعث یہاں پھنسے ہوئے ہیں اور مختلف ایئر لائنز کی جانب سے انہیں بار بار نئی تاریخ دی جا رہی ہے، کورونا کی تیسری لہر نے ان کی واپسی کو ناممکن اور مشکل بنادیا بنا دیا۔

جن مسافروں کو پاکستان میں60 دن ہوچکے ہیں ان کے موبائل فون بند کردیے گئے ہیں کیونکہ پی ٹی اے کی پالیسی ہے کہ بیرون ملک سے آنے والا موبائل فون60دن استعمال کرنے کے بعد ٹیکس ادا نہ کرنے پر بند کردیا جاتا ہے۔

بیرون ملک سے آئے پاکستانی زیادہ تر مہنگا موبائل فون استعمال کرتے ہیں جن پر کم ازکم ٹیکس 30 سے 40 ہزار فی موبائل ہے، پاکستانیوں نے پالیسی تبدیل کرنے کا مطالبہ کردیا،کورونا کی وجہ سے پھنسے پاکستانیوں کی مشکلات مزید بڑھ گئی ہے، کہتے ہیں کہ ویسے ہی بیروزگار ہیں، ٹٰیکس کے پیسے کہاں سے لائیں۔