پارٹی پالیسی سے اختلاف،پیپلز پارٹی کے سنئیر رہنما مصطفیٰ‌ نواز کھوکھر مستعفی ؟


پیپلزپارٹی کے فیصلوں سے اختلاف سامنے آنے کے بعد پیپلز پارٹی کے رہنما اور بلاول بھٹو کے ترجمان مصطفیٰ نواز کھوکھر نے استعفیٰ دے دیا ہے، وہ کچھ فیصلوں سے اختلاف کرتے ہوئے اپنے عہدے سے مستعفی ہوئے ہیں۔

پیپلز پارٹی ذرائع نے مصطفیٰ نواز کھوکھر کے عہدہ چھوڑنے کی خبروں کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ تھوڑا جذباتی ہو گئے ہیں، منانے کی بھرپور کوششیں کی جا رہی ہیں، امید ہے جلد مان جائیں گے۔

پیپلز پارٹی میڈٰیا سیل کی جانب سے واضح کیا گیا ہے کہ مصطفیٰ نواز کھوکھر نے جماعت نہیں چھوڑی صرف بلاول بھٹو زرداری کے ترجمان کی حیثیت سے کام کرنے سے انکار کر دیا ہے،مصطفیٰ نواز کھوکھر کو پارٹی کے کچھ فیصلوں پر اختلاف ہے۔ پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت انھیں منانے کے لیے متحرک ہو چکی ہے۔

دوسری جانب نجی ٹی وی کے مطابق سینیٹر مصطفیٰ نواز کھرکھر نے پارلیمانی نمائندوں سے استعفے لینے کے معاملے پر پارٹی پالیسی سے اختلاف کرتے ہوئے استعفیٰ دیا ہے،مصطفیٰ نواز کھوکھر نے پی ڈی ایم کے فیصلوں کو ماننے اور ایوانوں سے استعفے دینے کے معاملے پر اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے فیصلے سے سخت اختلاف کیا۔

دو روز قبل نجی ٹی وی کے پروگرام آف دی ریکارڈ میں گفتگو کرتے ہوئے پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما اور سینیٹر اعتزاز احسن نے استعفوں کے معاملے پر تحفظات کا اظہار کیا تھا،اُن کا کہنا تھا کہ اسمبلی سے استعفے دینے کا فیصلہ بالکل غلط ہے، میں پارٹی قیادت اور پالیسی سازوں کے سامنے اپنے تحفظات بیان کروں گا کیونکہ ایسا کرنے سے پی پی خود پر ایک چھاپ لگوا لے گی