پاکستان اور عالمی بینک میں امدادی معاہدہ طے پاگیا


پاکستان اور عالمی بینک کے درمیان 1 ارب 36 کروڑ ڈالر سے زائد کا امدادی معاہدہ طے پاگیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ورلڈ بینک کے ساتھ معاہدوں پر دستخط کی تقریب میں پاکستان کی جانب وزیر اقتصادی امور کےخسرو بختیاراور ورلڈ بینک کے کنٹری ڈائریکٹر ناجی بنہا سین نے شرکت کی۔

پاکستان کی جانب سے سیکرٹری اقتصادی امورنور احمد نے دستخط کیے جبکہ سندھ ، بلوچستان اورخیبر پختونخوا کے نمائندوں نے آن لائن اپنے اپنے معاہدوں پر دستخط کیے۔

میڈیارپورٹ کے مطابق ایک ارب 36 کروڑ60 لاکھ ڈالر کے کل 6 منصوبے ہیں جن میں 12 کروڑ 80 لاکھ کی گرانٹ بھی شامل ہے، ان منصوبوں میں معاشرتی تحفظ، زراعت و خوراک کی حفاظت،ہیومن ڈویلپمنٹ ، آب وہوا کے خطرے سمیت گورننس کے شعبوں میں بہتری کے اقدامات شامل ہیں۔

اس موقع پر ورلڈ بینک کے کنٹری منیجر کا کہنا تھا کہ کورونا بحران میں لاکھوں پاکستانی خاندان معاشی مشکلات کا شکار ہوئے، جن میں زیادہ متاثر غیر رسمی شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد تھے۔

امدادی پروگرام کے تحت 20 کروڑ ڈالر پنجاب و سندھ کی فصلوں کو ٹڈی دل سے محفوظ رکھنے اورفوڈ سیکیورٹی کیلئے مختص کیے گئے،جبکہ 20 کروڑ ڈالر سندھ کے کچھ علاقوں میں سیلاب اور خشک سالی کے خطرات کو کم کرنے کیلئے مختص کیے گئے ہیں۔