پی ڈی ایم وزیراعظم کو گھر بھیجنے کی کوششوں میں مصروف لیکن دوسری طرف عمران خان ،نوازشریف کو لانے کیلئے کونسا بڑا قدم اٹھانے جارہے ہیں ؟ بڑی خبر


لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )مشیر پارلیمانی امور بابراعوان نے کہاہے کہ نوازشریف کی واپسی کے حوالے سے اہم پیشرفت ہے ، وزیراعظم عمران خان خود برطانوی ہم منصب اور حکومت سے رابطہ کریں گے ۔

نجی ٹی وی چینل سماءنیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے بابر اعوان کا کہناتھا کہ اپوزیشن کی ناکامی کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ پچھلے سال یہ استعفیٰ مانگنے آئے تھے اور اب دینے کیلئے آ رہے ہیں ،قانون توڑنے والوں کو کارروائی کا سامنا کرنا پڑ ے گا ، ہم استعفوں کے معاملے پر ن لیگ والا کوئی کام نہیں کریں گے ، استعفیٰ دینے کا مطلب ہے کہ کوئی شخص استعفیٰ لکھے اور سپیکر کو دیں تو منظور ہو جائے گا ، جتنے استعفے آئیں گے اتنی سیٹیں پی ٹی آئی کو ملیں گی ، مہینہ مکمل ہونے دیں ،آپ کو خود پتا لگ جائے گا کہ ان کے کتنے لوگ استعفوں سے بھا گ گئے ہیں ۔

ان کا کہناتھا کہ اگر اپوزیشن چاہتی ہے کہ آئینی طریقے سے کچھ کریں تو وہ عدم اعتماد کی تحریک لائیں اور اس کیلئے انہیں پارلیمنٹ میں آنا پڑے گا ،ایک طرف کہتے ہیں کہ ہم بات کرنا چاہتے ہیں اور دوسری طرف یہ بتانے کو تیار نہیں کہ کس سے گفتگو کرنا چاہتے ہیں ۔ان کا کہناتھا کہ حالات بہتر ہوئے تو جنوری میں پارلیمنٹ کا اجلاس بلائیں گے ۔