چارماہ میں 92 ارب روپے سے زائد کے موبائل فونزدرآمد

0
44

رواں مالی میں 4 ماہ کے دوران 92 ارب روپے سے زائد کے موبائل فون درآمد کیے گئے، وفاقی ادارہ شماریات

فیڈرل بیورو آف سٹیٹسٹکس (وفاقی ادارہ شماریات) کی مالی سال 21-2020 کے ابتدائی 40 کے اعدادو شمار پر رپورٹ جاری کر دی گئی۔ جس کے مطابق لوگوں کا ذریعہ معاش متاثر ہونے کے باوجود موبائل فون کی درآمد میں 43 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

وفاقی ادارہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق موبائل فون کی درآمد میں گزشتہ مالی سال کے تناسب سے43 فیصد زیادہ موبائل فون درآمد کیے گئے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 4 ماہ میں 92 ارب 76 کروڑ روپے کے موبائل فون درآمد کیے گئے جوکہ گزشتہ مالی سال کی نسبت 43 فیصد زیادہ ہیں کیونکہ گزشتہ مالی سال کے انہی 4 ماہ میں 60 ارب روپے کے موبائل فون درآمد کیے گئے تھے۔

بڑی تعداد میں پاکستانیوں کے ذرائع آمدن متاثر ہونے کے باوجود گاڑیوں کی درآمد بھی 185 فیصد تک بڑھی اور 4 ماہ میں ہی 60 ارب روپے کی گاڑیاں امپورٹ کی گئیں۔ پٹرولیم مصنوعات کی درآمد پر سب سے زیادہ 525 ارب خرچ کئے گئے

ادارہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق کھانے پینے کی درآمدی اشیا پر 378 ارب روپے خرچ ہوئے جو گزشتہ سال سے 43 فیصد زیادہ ہے، 16 ارب 60 کروڑ کی چینی،31 ارب کی چائے، 30 ارب کی دالیں جبکہ 110 ارب روپے کا پام آئل بھی منگوایا گیا۔

پاکستان میں 35 ارب کی گندم، 10 ارب کے مصالحہ جات بھی امپورٹ کئے گئے جبکہ خام کپاس سمیت 157 ارب روپے کا ٹیکسٹائل کا سامان، لوہا، اسٹیل اور ٹائر بھی درآمد ہوئے۔ جولائی سے اکتوبر کے درمیان مجموعی درآمدات 0.38 فیصد کمی سے 15 ارب ڈالرز رہیں۔