چڑیا گھر انتظامیہ کا بیمار جانوروں کو موت کی نیند سلانے کا فیصلہ


لاہورچڑیا گھر انتظامیہ نے گزشہ کئی سالوں سے لاعلاج بیماریوں میں مبتلا جانوروں کو موت کی نیند سلانے کا فیصلہ کیا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق چڑیا گھر میں موجود ٹائیگر صام گزشتہ 16 سال سے فالج کے مرض میں مبتلا ہے،جس کے باعث اس کا پچھلا دھڑ ناکارہ ہوچکا ہے۔ٹائیگر صام پیدائش کے وقت سے ہی فالج کے مرض میں مبتلا ہے۔گوجرانوالہ سے پکڑا گیا ریچھ دونوں آنکھوں سے نابینا ہوچکا ہے جبکہ اسکی عمر بھی کافی زیادہ ہے۔اسکے علاوہ ایک مادہ زبیرہ ہے جو کہ اپنے قدموں پر کھڑی نہیں ہوسکتی۔

چڑیا گھر انتظامیہ کا کہنا ہے کہ غیر ملکی ماہرین سے ان جانوروں کے علاج کے لیے تجاویز مانگی گئی ہیں مگر کوئی مثبت جواب نہیں ملا،جس کے بعد ان جانوروں کو موت کی نیند سلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے تاہم اس کی حتمی منظوری زو مینجمنٹ کمیٹی دے گی۔وائلڈ لائف ایکٹ اس بات کی اجازت دیتا ہے کہ جو جانور لاعلاج مرض میں مبتلا ہیں انکو آسان موت دے دی جائے۔