کراچی: اندھی گولی سے 10 سالہ بچی جاں بحق، گھر ماتم کدہ بن گیا


کراچی: شہر قائد کے علاقے اورنگی ٹاؤن میں شادی کی تقریب میں مبینہ فائرنگ سے 10 سالہ بچی جاں بحق ہوگئی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق اورنگی ٹاؤن سیکٹر 5-F/2 صدیق اکبر مسجد کے قریب نامعلوم سمت سے آنے والی گولی لگنے سے 10 سالہ بچی مدیحہ شدید زخمی ہوئی جسے طبی امداد کے لئے عباسی شہید اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی۔

لواحقین نے میڈیا کو بتایا کہ پڑوس میں شادی کی تقریب کے دوران وقفے وقفے سے ہوائی فائرنگ ہورہی تھی، بچی نےکھڑکی سے جھانکا اور گولی سر پرآکر لگی، ہمارا مطالبہ ہے کہ واقعے میں ملوث شخص کو گرفتار کیا جائے۔

پولیس حکام کے مطابق بچے کے سر میں ایک گولی لگی جوکہ آرپار ہوگئی۔

واقعے کے بعد بچی کے اہل خانہ اسپتال سے لاش کو بغیر پوسٹ مارٹم کرائے بغیر سرد خانے منتقل کیا، تاہم پولیس حکام کی مداخلت پر بچی کے اہل خانہ پوسٹ مارٹم کے لئے راضی ہوئے،ضابطے کی کارروائی بعد مدیحہ کی لاش کو ورثاء کے حوالے کردیا گیا ہے۔

دس سالہ مدیحہ کی اندوہناک موت پر گھر میں کہرام مچ گیا، لواحقین دھاڑیں مار مار کر رونے لگے، کمسن بچی کی موت پر اہل محلہ بھی سوگوار ہے۔

پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ متاثرہ افراد نے ابھی تک ایف آئی آر درج کرانے کے لئے رابطہ نہیں کیا ہے، ،بچی کے والدین اگر اپنی مدعیت میں مقدمہ نہیں کراتے تو مقدمہ سرکاری مدعیت میں درج ہوگا۔