کوئٹہ: بازاروں میں فروخت ہونے والے گیس کمپریسرز کیخلاف کارروائی

موسم سرما کے دوران کوئٹہ میں گیس پریشر میں کمی کے مسئلے کا حل نکالنے کے لیے سوئی سدرن گیس کمپنی نے بازاروں میں فروخت ہونے والے گیس کمپریسرز قبضے میں لے لیے۔

بلوچستان ہائی کورٹ کے احکامات پر کوئٹہ میں گیس لوڈ شیڈنگ اور پریشر میں کمی کے مسئلے کے مستقل حل کے لیے سوئی سدرن گیس کمپنی نے کاروائی شروع کردی۔

ایس ایس جی سی کے ہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ میڈیا اینڈ پی اینڈ ڈی کاشف صدیقی کہتے ہیں کہ کچھ لوگوں کی وجہ سے بہت سارے لوگ گیس کی کمی کے مسئلے سے دوچار ہیں۔ کمپریسر کے استعمال سے گیس پریشر میں کمی کے مسائل ہیں ہم امید رکھتے ہیں کہ ہمارے کاوش اور عوام کے تعاون سے گیس کی کمی کے مسئلے پر قابو پایا جا سکتا ہے۔

شہری کہتے ہیں کہ گھروں میں گیس پریشر میں کمی کو پورا کرنے کے لیے کمپریسر استعمال کرنے پر مجبور ہیں۔ سوئی گیس کمپنی کوئٹہ میں گیس کی ترسیل یقینی بنائے تو کمپریسرز کا استعمال ترک کیا جا سکتا ہے۔

ایس ایس جی سی حکام نے خبردار کیا ہے کہ موجودہ کارروائی آگاہی مہم کے طور پر کی گئی۔ کمپریسرز کا استعمال اور خریدو فروخت بند نہ کیا گیا تو گرینڈ آپریشن کرتے ہوئے گھروں پر بھی چھاپے مارے جا سکتے ہیں۔