گِنس بک: پاکستانی نانی سے زیادہ کسی خاتون کی روزآنہ اتنی چھترول نہیں ہوتی