علیمہ خان کے پاس 13 جنوری تک رقم ادا کرنے کا وقت ہے، چیئرمین ایف بی آر

پاکستانیوں کے بیرون ملک اثاثوں اور اکاﺅنٹس سے متعلق کیس کی سماعت آج سپریم کورٹ میں ہوئی۔ سماعت کے دوران چیف جسٹس نے چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) سے استفسار کیا کہ کیا علیمہ خان نے رقم ادا کر دی ہے؟چیئرمین ایف بی ار نے عدالت کو بتایا کہ وزیر اعظم کی بہن کو 29اعشاریہ 4ملین روپے ادا کرنے ہیں اور ان کے پاس 13 جنوری تک رقم ادا کرنے کا وقت ہے۔

چیف جسٹس کے پوچھنے پرچیئرمین ایف بی ار جہانزیب خان نے بتایا کہ 167ملین روپے کی ادائیگی ٹیکس کی مد میں وصول ہو چکی ہے جبکہ 140ملین روپے کی ادائیگیوں کا مزید تعین کر لیا ہے۔ چیئرمین ایف بی آر کا مزید کہنا تھا کہ تمام کیسز پر کارروائی کر رہے ہیں جس پر چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کیا وقار احمد نے جرمانے کی رقم ادا کر دی ہے؟ جس پر ان کے وکیل نے آگاہ کیا کہ ان کے موکل نے 60 ملین روپے کی رقم ادا کر دی ہے۔

گزشتہ ماہ کی سماعت کے دوران ایف بی آر نے علیمہ خان کی منی ٹریل عدالت میں پیش کی تھی اور عدالت کو آگاہ کیا تھا کہ علیمہ خان پر دو کروڑ چورانوے لاکھ روپے کا جرمانہ اور ٹیکس عائد کیا۔ چیف جسٹس نے علیمہ خان کو رقم ایک ہفتے میں ادا کرنے کا حکم دیا تھا۔