کراچی قونصلیٹ پر حملہ کرنے والے تینوں دہشتگرد ہلاک، چینی سفارتکار محفوظ، دو پولیس اہلکار شہید

دہشتگردوں نے کراچی میں واقع چینی قونصلیٹ پر حملہ کیا تاہم شرپسندوں کو سیکیورٹی فورسز نے اپنے ناپاک عزائم میں کامیاب نہیں ہونے دیا اور ہلاک کر دیاہے ۔چینی قونصلیٹ کا عملہ مکمل طورپر محفوظ ہے جبکہ فائرنگ کے تبادلے میں پولیس کے دو جوان شہید ہو گئے ہیں اور ایک زخمی ہوا ہے۔پولیس کے مطابق قونصل خانے کا تمام چینی عملہ بالکل محفوظ ہے اور صورتحال پر قابو پالیا گیا ہے۔ کراچی پولیس چیف ڈاکٹر امیر شیخ کے مطابق صبح ساڑھے 9 بجے کے قریب 3 دہشت گردوں نے چینی قونصل خانے میں داخل ہونے کی کوشش کی، تاہم گارڈز کے روکنے پر انہوں نے فائرنگ کردی، جس پر قونصلیٹ پر تعینات سیکیورٹی گارڈز نے بھی جوابی فائرنگ کی، اس دوران دھماکے کی آواز بھی سنی گئی۔پولیس چیف کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے تینوں حملہ آوروں کو ہلاک کرکے ان کے قبضے سے خودکش جیکٹس اور اسلحہ برآمد کرلیا۔انہوں نے مزید بتایا کہ حملہ آوروں کی فائرنگ کے نتیجے میں 2 پولیس اہلکار شہید اور ایک سیکیورٹی گارڈ زخمی بھی ہوا۔

اس سے قبل ڈی آئی جی ساؤتھ جاوید عالم اوڈھو نے بھی تصدیق کی کہ ملزمان کی جانب سے کیے گئے ابتدائی حملے میں قونصلیٹ پر تعینات 2 پولیس اہلکار شہید ہوئے جبکہ ایک سیکیورٹی گارڈ کو زخمی حالت میں جناح اسپتال منتقل کیا گیا۔جناح اسپتال کے شعبہ حادثات کی سربراہ ڈاکٹر سیمی جمالی نے بھی واقعے میں 2 پولیس اہلکاروں کی شہادت کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ واقعے میں زخمی ہونے والے سیکیورٹی گارڈ کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔