تحریک انصاف کی حکومت میں ملے گا انصاف وہ بھی تیز تر ،معمولی نوعیت کے کیسز کی سماعت کیلئے بڑا فیصلہ کرلیا گیا

پشاور(سی پی پی) خیبر پختونخوا میں معمولی نوعیت کے کیسز کی سماعت کے لیے عدالتوں کے قیام کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخوا میں معمولی نوعیت کے کیسز کی سماعت کے لیے عدالتوں کے قیام کا فیصلہ کیا گیا ہے اور اس ضمن میں چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس وقار احمد سیٹھ نے عدالتوں کے قیام کا حکم دے دیا ہے۔ ترجمان پشاور ہائی کورٹ کے مطابق چھوٹے مقدمات کے لیے قائم عدالتیں 1 لاکھ روپے جرمانہ اور 3 سال سزا تک کے کیسز کی سماعت کریں گی جب کہ اضلاع کی سطح پر قائم ہونے

والی عدالتوں میں کیسز کی سماعت سول جج اور مجسٹریٹ کریں گے۔ ترجمان کا کہنا ہے کہ عدالتوں کے قیام کا مقصد عوام کو بروقت اور سستے انصاف کی فراہمی ہے